سپریم کورٹ نے عطا الحق قاسمی تقرری کیس کا فیصلہ محفوظ کرلیا
  • 0
  • 0

http://tuition.com.pk
atta ul haq supreme court

سپریم کورٹ نے ایم ڈی پی ٹی وی تقرری کیس کا فیصلہ محفوظ کرلیا۔تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں ایم ڈی پی ٹی وی کی تقریری کے حوالے سے کیس کی سماعت ہوئی۔۔عدالت نے ایم ڈی پی ٹی وی تقرری کیس کا فیصلہ محفوظ کرلیا ہے۔۔عدالت کا کہنا یے کہ پی ٹی وی کے ایم ڈی کی تقریری کے حوالے سے فیصلہ عدالت کرے گی۔۔عدالت

نے اٹارنی جنرل سے استفسار کیا کہ سارے معاملے کی تحقیقات کس ادارے کو سونپیں۔ اٹارنی جنرل نے کہا کہ نیشنل آئیکون کے خلاف فوجداری کاروائی کو نہیں دیکھنا چاہتا۔اٹارنی جنرل کا مزید کہنا تھا کہ عطا الحق قاسمی نے رقم واپس کی تو بہتر ہو گا۔تو چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ کیا آپ نے موکل سے رقم واپس لینے کی ہدایات لیں۔تو اٹارنی جنرل نے کہا کہ اگر عطاالحق قاسمی رقم واپس کر دیں تو سارا کیس ہی ختم ہو جائے گا۔ جب کہ عاطا الحق قاسمی کے وکیل کا کہنا تھا کہ عطا الحق رقم واپس نہیں کریں گے انہوں نے استحقاق کے مطابق مراعات لیں۔ یاد رہے سپریم کورٹ میں پاکستان ٹیلی ویژن کے مینجنگ ڈائریکٹر کی تقرری کے کیس کی سماعت ہوئی۔ سابق سیکرٹری خزانہ وقار مسعود نے عدالت میں کہا کہ میں نے بیان حلفی جمع کروا دیا ہے، عطا الحق قاسمی کی ماہانہ 15 لاکھ تنخواہ پر میں نے اعتراض اٹھایا۔انہوں نے کہا کہ 27 کروڑ روپے کا منظور شدہ پیکج سے کوئی تعلق نہیں، 27 کروڑ کے بجائے 54 ملین کا کل پیکج ہے۔27 کروڑ کے پیکج میں دیگر چیزیں بھی شامل کی گئی ہوں گی۔ ریسرچر پی ٹی وی جویریہ قریشی نے عدالت میں کہا کہ سپریم کورٹ قابل شخص کی تقرری کرے، پی ٹی وی کا گزشتہ 5 سال کا آڈٹ کروایا جائے۔ چیف جسٹس نے کہا کہ فواد حسن فواد کہتے تھے وزیر اعظم سیکرٹریٹ کا کوئی لینا دینا نہیں، مقدمہ مزید تحقیقات کا تقاضا کرتا ہے۔اٹارنی جنرل نے کہا کہ ابھی رقم واپس ہوجاتی ہے تو مقدمہ نیب کو نہ بھجوایا جائے جس پر چیف جسٹس نے کہا کہ ہم نے عطا الحق قاسمی کو اسی لیے طلب کیا تھا۔۔۔عدالت نے عطا الحق کی وزیر اعظم سیکرٹریٹ اور وزارت خزانہ کو بھیجی گئی سمری طلب کرلی۔

تازہ ترین

اپنا تبصرہ چھوڑیں